پشاور:جمعیت علما اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ عمران خان مستعفی ہوں،نئے انتخابات کرائے جائیں،خلائی مینڈیٹ سے آنیوالی جعلی حکومت کو عوام کی حمایت حاصل نہیں ،میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہو ں نے کہا حکومت بجٹ پیش کرنے کی صلاحیت نہیں رکھتی، بجٹ آئی ایم ایف تیار کریگا ،جن سے ایک شہر نہیں سنبھالا جاتا وہ ملک کو کیا سنبھالیں گے ، ملک میں ٹیکنو کریٹس کی حکومت ہے ،تحریک انصاف کی حکومت نے پشاور شہر کا برا حال کر دیا ہے ،اتنا قرضہ لینے کے باوجود عام آدمی کی حالت نہیں بدلی حکومت عام آدمی کے تحفظ میں ناکام ہو چکی ہے اور ملک میں امن وامان کی صورتحال مخدوش ہے ، معیشت کی کشتی ہچکولے کھارہی ہے لیکن اس کو سہارا دینے والا کوئی نظر نہیں آرہا، مہنگائی آخری حد تک پہنچ گئی ہے ،انہوں نے کہا آصف زرداری چور تھا تو ان کے دور کے وزیر خزانہ حفیظ شیخ کو کابینہ میں کیوں لیا؟ اب حفیظ شیخ‘‘امرت دھارا’’ بن گئے ہیں۔