اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان نے بھارتی ہم منصب نریندر مودی کو فون کر کے دونوں ممالک کے عوام کی بہتری کے لیے مل کر کام کرنے کی خواہش کا اظہار کیا۔ ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے سوشل میڈیا پر اپنے بیان میں بتایا کہ وزیراعظم عمران خان نے نریندر مودی سے ٹیلی فونک رابطہ کر کے انہیں لوک سبھا کے الیکشن میں کامیابی پر مبارکباد دی اور دونوں ممالک کے عوام کی بہتری کے لئے مل کر کام کرنے کی خواہش کا اظہار کیا۔ وزیراعظم نے جنوبی ایشیا میں امن، ترقی اور خوشحالی کے عزم کا اعادہ بھی کیا۔وزیراعظم عمران خان نے بھارتی لوک سبھا کے انتخابات میں کامیابی پر نریندر مودی کو سوشل میڈیا کے ذریعے بھی مبارکباد دی تھی جس پر نریندر مودی نے بھی تشکر کا اظہار کیا تھا۔ بھارتی وزیراعظم نریندمودی کی تقریب حلف برداری 30 مئی کو ہوگی۔ مودی کی تقریب حلف برداری کیلئے مختلف سربراہان مملکت کو مدعو کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ تقریب میں سری لنکا، روس، فرانسیسی صدور، اسرائیلی وزیراعظم، ولی عہد ابوظہبی محمد بن زید النہیان، بنگلہ دیشی وزیراعظم حسینہ واجد کو شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔ بی جے پی ذرائع کے مطابق مودی کی تقریب حلف برداری میں وزیراعظم عمران خان کو مدعو نہیں کیا جائے گا۔ نریندر مودی جنہوںنے لوک سبھا انتخابات میں بھاری اکثریت کیساتھ کامیابی حاصل کرلی ہے اور وہ دوسری بار ملک کے وزیراعظم کی حیثیت سے حلف لے رہے ہیں۔ بی بی سی کے مطابق فون پر ہونے والی بات چیت کے بارے میں بھارتی وزارت خارجہ کی طرف سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا کہ نومنتخب وزیراعظم نریندر مودی نے امن‘ خوشحالی اور ترقی کے اہداف کو حاصل کرنے کے لئے اعتماد اور دہشت گردی سے پاک ماحول پیدا کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ جوہری طاقت رکھنے والے دونوں ہمسایہ ملکوں کے وزراء اعظموں میں آخری مرتبہ جولائی 2018 ء میں بات چیت ہوئی تھی جب نریندر مودی نے عمران خان کو ان جماعت تحریک انصاف کی انتخابی کامیابی پر مبارک باد پیش کی تھی۔