میلسی ( نمائندہ بی بی سی اردو)بیکریوں پر مضر صحت اشیاء کی فروخت جاری، پنجاب حکومت کے تمام اقدامات متعلقہ حکام کی نااہلی کا شکار، شہری موذی بیماریوں میں مبتلا ہونے لگے۔ تفصیل کے مطابق شہر میں ریلوے روڈ، قائد اعظم روڈ، کالونی روڈ، تھانہ بازار اورر دیگر مقامات پر قائم بیکریاں پر حکومتی احکامات کے مطابق کوئی اقدام بھی نظر نہیں آتا۔ انکے گودام اور باورچی خانہ میں گندگی اور تعفن عام پایا جاتا ہے ان بیکریوں میں زائد المعیاد اور چربی سے بنے گھی کو شر عام استعما ل کیا جاتا ہے ۔ عملہ کو حفظان صحت کے اصولوں کے مطابق صفائی کا بھی پابند نہیں کیا جارہا۔ حکو مت پنجاب نے ٖفوڈز ایکٹ میں ترمیم کرتے ہوئے پنجاب بھر میں فوڈ اتھارٹی کی ٹمیں تشکیل دی تھیں جوکہ صرف کاغذی کاراوئی تک محدود ہیں اور انہوں نے بیکریوں کو حکومتی احکامات کا پابند کرنے کی بجائے وہاں احکاماتی لٹریچر آویزاں کروا کر اپنا کام مکمل کر لیا۔ عوامی و سماجی حلقوں نے ڈپٹی کمشنر وہاڑی سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔
میلسی (نمائندہ بی بی سی اردو)) میونسپل کمیٹی میلسی کی واٹر سپلائی لائن میں مضر صحت پانی کی سپلائی جاری ،گندہ پانی پینے سے ایک ہی خاندان کے 9 افراد متاثر ،متاثرہ خاندان کو تحصیل ہیڈ کواٹرہسپتال میلسی میں منتقل کر دیا گیامحلہ ریاض آباد ملتان روڈ میلسی کے رہائشی ذوالفقار نے میڈ یا بتایا ہمارے گھر میں میونسپل کمیٹی کی واٹر سپلائی ہے جس سے میرے گھر افراد نے اس پانی کو پیا تو سب گھر والے پیٹ کی بیماری میں مبتلا ہوگئے متاثرہ خاندان میں ،دلشاد کوثر مسرت بی بی ،اریبہ فاطمہ ،جان محمد ،ذوالفقار سمیت دیگر کو فوری طور پر تحصیل ہیڈ کواٹر ہسپتال میلسی لایا گیا جہاں پر ان کو طبی امداد دی گئی ذوالفقار نے کہا کہ پہلے بھی کئی مرتبہ میونسپل کمیٹی کے چیرمین اور وائس چیرمین کو گندے اور بدبودارپانی بارے شکایت کی لیکن کوئی کاروائی نہ کی گئی اس نے ڈی سی وہاڑی سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔
میلسی (نمائندہ بی بی سی اردو)) پنجاب میں آوارہ کتے کون مارے گا ،ڈی جی ہیلتھ سروسز پنجاب کے احکامات پر ویکسی نینڑ ز نے آوارہ کتوں کے خلاف کمپین سے انکار کر دیا ہائیکورٹ سے رجوع کر لیا عدالت کا سیکرٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ سے معاملہ حل کر کے 10دن میں آگا ہ کرنے کا حکم دے دیا ،بتایا جاتا ہے کہ 16جنوری کو ڈی جی ہیلتھ سروسز نے ریبز ویکسینشن کے اخراجات کو کم کرنے کے لئے پنجاب کی ہر یونین کونسل میں ویکسی نیٹر کو آوارہ کتوں کو مارنے کے لئے20جنوری سے20فروری تک کمپین کے احکامات جاری کئے تھے مگر ویکسی نیٹر ز نے اس پر عمل کرنے کی بجائے ہائیکورٹ سے رجوع کر لیا تھا انہوں نے موقف اختیار کیا کہ پنجاب لوکل گورئمنٹ ایکٹ 2013میں ذمہ داری لوکل باڈیز کو سونپی گئی ہے اس لئے یہ ذمہ داری ان کی نہ ہے جس پر جسٹس امیر بھٹی نے سیکرٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ سے 10دن میں معاملہ حل کر کے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا ۔